سوع مسيح كون هے؟




سوال: سوع مسيح كون هے؟

جواب:
یسوع مسیح کون هے؟ غیر مشابه سوال، "کیا خدا موجود هے؟"بهت کم لوگ سوال اُٹھاتے هیں که یسوع مسیح موجود تھے۔ یه عام طور پر قبول کیا جاتا هے که یسوع مسیح حقیقت میں ایک آدمی تھے جو اسرائیل کی سرزمین پر تقریباً 2000سال پهلے آئے۔ جب یسوع کے مکمل شخصیت کے بارے میں بات چیت کی جاتی هے تو پھر بحث شروع هوتی هے۔ تقریباً هر مذهب یه تعلیم دیتا هے که یسوع ایک پیغبر تھے ، ایک اچھے استادتھے یا ایک متقی انسان تھے۔ مشکل یه هے، کلامِ بتایا هے که یسوع لامحدود حد تک ایک پیغبر سے زیاده تھے، ایک استاد سے زیاده تھے ، ایک متقی انسان سے زیاده تھے۔

سی.ایس.لیوس اپنی کتا ب "خالص مسحیت "میں لکھتے هیں : "میں یهاں هر کسی کو باز رکھنے کی کوشش کرتا هوں اسے حقیقی بیوقوفی والی شے کهنے سے جو اکثر لوگ اس کے بارے میں کهتے هیں ﴿یسوع مسیح﴾: "میں یسوع کو ایک نیک عظیم استاد ماننے کے لئے تیار هوں، لیکن میں اس کے خدا هونے کے دعوے کو قبول نهیں کرتا"۔ یه وه چیز هے جو همیں نهیں کهنی چاهیے۔ ایک آدمی جو صرف انسان تھا اور ایسی باتیں کهے جو یسوع نے کهیں ایک اچھا استاد نهیں هو گا۔ خواه وه ایک دیوانه هو ایک انسان هوتے هوئے جو کهے که وه ایک روندا هوا انڈا هے یا اور وه جهنم کا شیطان هے۔ آپ ضرور اپنی پسند منائیں گے۔ جبکه یه انسان تھا، اور هے، خدا کا بیٹا، یا ایک دیوانه یا اس سے بدتر ...آپ اس بیوقوف کو روک سکتے هیں، آپ اس پر تھوک سکتے هیں اور شیطان هونے کی وجه سے اسے مار سکتے هیں؛ یا اس کے قدموں میں گر کر اس مالک اور خدا کهه سکتے هیں۔ لیکن همیں اسکے بارے میں ان بے معنی باتوں کی حمایت نهیں کرنی چاهیے که وه ایک عظم انسانی استاد تھا۔ اس نے همارے لئے کوئی رسته نهیں چھوڑا۔ اس کا ایسا کوئی اراده نہیں۔

پس، یسوع نے کیا هونے کا دعوہ کیا؟ کلام ِ مقدس اس کے بارے میں کیا کهتا هے که وه کون تھا؟ پهلے، آئیے یسوع کے الفاظ کو دیکھیں یوحنا10باب30آیت میں"میں اور باپ ایک هیں"۔ پهلی نظر میں، ایسا نهیں لگے گا که یه خدا هونے کا دعویٰ هے۔ بهر حال ، اس بیان پر یهودیوں کے ردِ عمل کو دیکھیں، "هم اچھے کام کے سبب سے نهیں بلکه کفر کے سبب سے تجھے سنگسار کرتے هیں اور اس لئے که تو اپنے آپ کو خدا بناتا هے"﴿یوحنا10باب33آیت﴾۔ یهودی سمجھتے تھے که یسوع کا بیان خدا هونے کا دعویٰ هے۔ ذیل کی آیات میں یسوع یهودیوں کو درست نهیں کرتا یه کهنے سے، "میں خدا هونے کا دعویٰ نهیں کرتا"۔ یه ظاهر کرتا هے که یسوع حقیقت میں یه کهه رهے تھے که وه خدا تھے اس اعلان کے ذریعے، "میں اور باپ ایک هیں" ﴿یوحنا10باب33آیت﴾۔ یوحنا8باب58آیت ایک دوسری مثال هے۔ یسوع نے اعلان کیا، "میں تم سے سچ سچ کهتا هوں که پیشتر اس سے که ابرا هم پیدا هوا میں هوں "دوباره ردِ عمل کے طور پر یهودیوں نے پتھر اُٹھائے اور یسوع کو پتھر مارنے کی کوشش کی ﴿یوحنا 8باب59آیت﴾۔ یسوع نے اپنی شناخت کا اعلان ایسے کیا، "میں هوں"ایک پرانے عهدنامے کے خدا کے نام کی سمت آگاهی کرتا هے ﴿خروج3باب14آیت﴾۔ کیوں یهودی یسوع کو پتھر مارنا چاهتے تھے اگر اس نے نهیں کها تھا جو وه یقین کرتے تھے که گستاخی هے، نام سے خدا هونے کا دعویٰ کرنا؟

یوحنا1باب1آیت فرماتی هے که،"کلامِ خدا تھا"۔ یوحنا1باب14آیت کہتی هے که، "کلام مجسم هوا"۔ یه واضع طور پر اشاره کرتا هے که یسوع مجسم خدا هے۔ توما رسول یسوع سے کهتے هیں، "اے میرے خداوند اے میرے خدا "﴿یوحنا 20باب28آیت﴾۔ یسوع نے اسکو درست نهیں کیا۔ پولوس رسول اسکو ایسے بیان کرتے هیں، ..."اپنے بزرگ خدا اور منجی یسوع مسیح "﴿ططس2باب13آیت﴾۔ پطرس رسول بھی ایسے هی کهتے هیں، ..."همارے خداوند اور منجی یسوع مسیح"﴿2۔پطرس1باب1آیت﴾۔ خدا باپ یسوع کا گواه هے، اور اسکی مکمل شناخت هے، "مگر بیٹے کے بارے میں کهتے هے، "تیرا تخت اے خدا ابدالآباد قائم رهے گا، اور راستباز تیری بادشاهی کے وارث هونگے"۔ پرانے عهدنامے کی پیشن گوئیاں مسیح کے خدا هونے کے بارے میں اعلان کرتی هیں، "اسلئے همارے لئے ایک لڑکا تولد هوا اور هم کو ایک بیٹا بخشا گیا اور سلطنت اسکے کندھے پر هوگی اور اسکانام عجیب مشیر خدای قادر ابدیت کا باپ سلامتی کا شاهزاده هوگا"۔ ﴿یعسیاہ ۹ باب کی چھ آیت ﴾۔

پس، سی.ایس.لیوس نے دلائل پیش کئے، یسوع کو اچھے استاد کے طور پر مانناایک اچھا پهلو نهیں هے۔ یسوع واضع اور ناقابلِ انکار طور پر خدا هونے کا دعویٰ کیا۔ اگر وه خدا نهیں ، پھر وه جھوٹا هے، اور اسلئے وہ نبی بھی نہیں ہو سکتا ، نه ایک اچھا استاد یا نه ایک متقی انسان هے۔ کئی بار یسوع کے الفاظ کو بیان کرنے کی کوششیں هوئیں، جدید "عالم"دعویٰ "سچے تاریخی یسوع"نے بهت سی ایسی چیز نهیں کهیں جو کلامِ اس سے منسوب کرتا هے۔ هم کون هیں جو خدا کے کلام کے بارے میں دلیل دیتے هیں که یسوع نے کیا کها اور کیا نه کها؟ کیسے ایک "عالم"یسوع کی زندگی سے2000سالوں کو مٹا سکتا هے که یسوع اس بارے میں بهتر جانتا هے که اس نے کیا کها اور کیا نه کها بلکه وه جو اس کے ساتھ رهتے تھے، ساتھ خدمت کرتے تھے اور جن کو یسوع نے خود تعلیم دی﴿یوحنا 14باب26آیت﴾؟

یسوع کی حقیقی شناخت پر سوال کیوں ضروری هیں؟ یه کیوں ضروری هے که یسوع خدا هے یا نهیں؟ سب سے ضروری وجه یه هے که یسوع خدا تھا که اگر وه خدا نهیں، تو اسکی موت تمام دنیا کے گناهوں کا جرمانه اداکرنے کیلئے ناکافی تھی ﴿1۔یوحنا2باب2آیت﴾۔ صرف خدا هی یه بیش قیمت جرمانه ادا کرسکتا ہے﴿رومیوں5باب8آیت؛2۔کرنتھیوں5باب21آیت﴾۔ یسوع هی خدا تھا اسلئے وهی یه قرض ادا کرسکتا تھا۔ یسوع کو انسان بننا تھا تا کہ وہ مر سکے۔ نجات صرف یسوع مسیح پر ایمان لانے هی سے ملتی هے 'یسوع' کو الہویت یہ ہے کہ وهی نجات کا رسته هے۔یسوع خدا هے کیونکه وه اعلان کرتا هے، "راه اور حق اور زندگی میں هوں ۔ کوئی میرے وسیله کے بغیر باپ کے پاس نهیں آتا"﴿یوحنا14باب6آیت﴾۔



واپس اردو زبان کے پہلے صفحے پر



سوع مسيح كون هے؟